ٹک ٹاک نے پاکستانی صارفین کی 12.5 ملین ویڈیوز ڈیلیٹ کردیں

ٹک ٹاک نے پاکستانی صارفین کی 12.5 ملین ویڈیوز ڈیلیٹ کردیں

ٹک ٹاک
سوشل میڈیا پلیٹ فارم ٹک ٹاک نے کمیونٹی گائیڈ لائنز کی خلاف ورزی پر 2022 کی پہلی سہ ماہی میں پاکستان سے ایک کروڑ پچیس لاکھ ویڈیوز ڈیلیٹ کردی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق پاکستان کمیونٹی گائیڈ لائنزکی خلاف ورزیوں کے باعث حذف کی جانیوالی ویڈیوز کے اعتبار سے دوسرے نمبر رہا جودنیا بھر میں حذف کی گئی ویڈیوز کی دوسری سب سے بڑی تعداد ہے۔

پاکستان میں کسی بھی ویڈیو کو اْس کے دیکھے جانے سے قبل حذف کرنے کی شرح 96.5 فیصد اور 24 گھنٹے کے اندر حذف کیے جانے کی شرح 97.3 فیصدرہی۔

ٹک ٹاک کے ذریعے ایک کروڑ 24لاکھ نوے ہزار تین سو نو پاکستانی ویڈیوزحذف کیے جانے کی شرح98.5 فیصد رہی ہے، رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ روس-یوکرین جنگ کے تناظر میں،ٹک ٹاک میں تحفظ کی ٹیم نے یوکرین جنگ پر توجہ مرکوز رکھی اور 41,191 ویڈیوزحذف کیں۔

کمیونٹی گائیڈ لائنز انفورسمنٹ میں کمیونٹی کے تحفظ اور پلیٹ فارم پرصلہ رحمی کو فروغ دینے کے لیے اْس کے عزم کے بارے میں اپ ڈیٹس بھی شامل ہیں۔

رپورٹ کے مطابق کسی بھی ویڈیو کو اس کے دیکھنے جانے سے قبل حذف کرنے کی شرح 96.5 فیصد اور 24 گھنٹے کے اندر حذف کیے جانے کی شرح 97.3 فیصد رہی۔

اس حوالےسے پہلے نمبر پر امریکا ہے جہاں ایک کروڑ چالیس لاکھ چوالیس ہزار دو سو چوبیس ویڈیوز حذف کیں گئیں، جو دنیا بھر میں سب سے زیادہ ہیں۔

رواں سال کی پہلی سہ ماہی میں ٹک ٹاک پر اپ لوڈ کی گئی ویڈیوزمیں سے دس کروڑ 23 لاکھ پانچ ہزار پانچ سو سولہ ویڈیوز حذف ہوئیں جو کل تعداد کے تقریباً 1.0فیصد کی نمائندگی کرتی ہے۔

ویڈیوزکو مضبوط کمیونٹی گائیڈ لائنز کی خلاف ورزی پر حذف کیا گیا۔ ٹک ٹاک پر مواد اپ لوڈ کئے جانے سے متعلق راہنما خطوط اور پالیسیوں کے بارے میں معلومات اردو سمیت دیگر زبانوں میں موجود ہیں۔

Spread the love

Leave a Reply

Your email address will not be published.